نظم # مسدّس #موبائل فون اور آجکل کے پاکستانی بچے

وہ دیکھو کان میں دو گھنٹے سے لگائے کھڑا ہے

اس  کے  پاس  شاید  بات  کرنے  کا   ٹائم  بڑا  ہے

اسے  سافٹ  وئیر اپ  لوڈ  کرنے کا چسکا  پڑا ہے

ہر مہینے بدلتا ہے موبائل  دُبئی کا پیسہ جو بڑا ہے

اس دور میں” بھیّا   جی ” موبائل  فون ہے بڑی نعمت

گھر کا بڑا بوڑھا لیکن ” اس کو” کہتا ہے  بڑی زحمت

کوئی کان میں  لگا  کے  مو بائل  پر سنتا  ہے  گانے

کوئی ہاتھ میں لئے موبائل  پر لگا  ہے سیلفی  بنانے

کوئی  موبائل لئے  کھڑا ہے سڑک پر   ویڈیو بنا نے

کوئی موبائل لئے  پارک  جا گھُسا   ہے   لڑکی پٹانے

یارو !اس دور میں  موبائل  سب کی بن  گیا  ہے عادت

یارو! کبھی کبھی موبائل گھر میں پھیلا دیتا ہےعداوت

موبائل لے کے فوراً  بستر میں  جا  گھُسا  ہے

سرچنگ میں اماں کی  بستر میں  پکڑا گیا  ہے

مار پڑی ابا سے جو بہت زور کی تو رو پڑا ہے

کیا  بتاؤں  آپ  کو  جناب موبائل   بڑی  بلا  ہے

اس موبائل کے چکر میں  سب  بچوں کی آتی  ہے شامت

اس موبائل کے چکر میں ماں بھی خوب کرتی ہے ملامت

ایک  ہمت  والا  موبائل چھپا  گھر سے اسکول لے گیا

مگرقسمت کا مارا وہ موبائل چلا نہ سکا فضول لے گیا

پکڑ جانے کا ڈرتھا سو موبائل چوکیدار شمسل  لے گیا

بند پڑا تھا اس کا موبائل  چھٹی میں  گھر بزدل  لے گیا

گھر پر  سر منڈاتے  ہی اولے  پڑے  اور  آگئی  مصیبت

کھانا بھی نہ ملا اور مہمانوں کے سامنے ہوگئی فضیحت

رات  بھر  جوان   لڑکے  موبائل  پر  کرتے   ہیں   باتیں

ہاں  !  یہ  لڑکیاں  بھی کم نہیں ، خوب  کرتی  ہیں  باتیں

رات  بھر چلتی ہیں ! آپس  میں  نہ  جانے  کیا  کیا  باتیں

جب آنکھ کھلتی ہے دیرسے ، توما ں سناتی ہے صلوٰتیں

محبت کے چکر میں اٹھانی  پڑی بہت  زیادہ  ہی  ندامت

اس راز کو راز ہی رکھ لینا اب  نہ کر دینا کوئی شرارت

موبائل کا جنون بھی دیکھو! بڑی بھیانک بلا ہے

بچہ،بوڑھا اورنوجوان اس کے چکرمیں مبتلا ہے

سارے جہاں کی خبر دیتا ہے  یہ آفت  کا پتلا  ہے

بازار جو آدمی گیا ہے موبائل  لے کر  ہی  ٹلا ہے

موبائل  کے کارو  بار میں روز بروز بڑھ  رہی ہے لذت

کاروبار زوروں  پر ہے مگر اس سے اٹھ گئی ہے برکت

موبائل فون کی لت نے سکون غارت کر دئے ہیں دوستو

بچے”بھی سارے ماں باپ  سے دور کر دئے ہیں دوستو

علماءبھی ہمارے کہیں غفلت  کی نیند سورہے ہیں دوستو

دجال”کی چال میں  شاید  مسلمان پھنس گئے  ہیں دوستو

ہمارے  اعمال   کی  شامت  سے  نازل  ہوئی  ہے  یہ  آفت

سُجھاؤ ہم کو بھی کوئی رستہ!بتاؤکیسے دورہوگی یہ لعنت

اے  میرے  رب  !  یہ  کیسا  مشکل  وقت  آن  پڑا  ہے

دنیا کے  آلام و مصائب نے  مسلمانوں  کو آ جکڑا  ہے

ٹیکنا لوجی کا شیطان بھی ہم سے کھلم کھلا آ بِھڑا ہے

اے  میرے  رب ! تو  بچالے  ہم  میں  کہاں  جگرا  ہے

یا رب  ! سکندر ؔ کی نہیں  ہے اس زمانے میں کوئی اوقات

محمد ﷺ  کے وسیلے  سے ، دے دے ہمیں  بھی نجات

سکندرؔ

Advertisements

One thought on “نظم # مسدّس #موبائل فون اور آجکل کے پاکستانی بچے

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s